Hero

ای سگریٹ کیا ہوتے ہیں اور آپ ان کو کیسے استعمال کر سکتے ہیں؟

برطانیہ میں لگ بھگ 30 لاکھ افراد، ای سگریٹ استعمال کرتے ہیں - ان میں سے تقریباً نصف سے زیادہ افراد سگریٹ نوشی مکمل طور پر ترک کرچکے ہیں۔

قابل اعتماد سائنسی شواہد موجود ہیں جن سے تصدیق ہوئی ہے کہ ای سگریٹ عام سگریٹ سے (کم از کم %95 فیصد) کم نقصان دہ ہیں۔

کرونا وائرس اور لندن سگریٹ نوشی کا خاتمہ:

ان حالات میں جبکہ ہم سب کو گھروں پر رہنے اور سماجی فاصلے کے اقدامات اٹھانے کے لیے کہا جا رہا ہے، یاد رکھیں کہ ای سگریٹس کو آن لائن اپنے گھر پر بذریعہ ڈلیوری منگوانے کے لیے ویپ اسٹورز سے خریدا جا سکتا ہے۔ لندن سگریٹ نوشی کا خاتمہ

(Stop Smoking London) آپ کی سگریٹ نوشی ترک کرنے کی مکمل کوشش میں یہاں آپ کی مدد کے لیے موجود ہے۔ سگریٹ نوشی ترک کرنے میں اپنے آپ کو پُرعزم رکھنے کے لیے مدد کی خاطر ترغیبی ایس ایم ایس ٹیکسٹ پیغامات وصول کرنے کے لیے آج ہی سائن اپ کریں۔

ای سگریٹ کے بارے میں آپ کو کیا جاننا ضروری ہے

ای سگریٹ کیا ہے؟

ای سگریٹ ایک بیٹری سے چلنے والی ڈیوائس (آلہ) ہے جو ای - لیکویڈ یا جوس نامی محلول کو گرم کرتی ہے۔ ای لیکویڈ میں نکوٹین اور کھانوں میں پائے جانے والے عام فلیورز (ذائقے) ہوتے ہیں۔ ای سگریٹ کے ذریعے آپ دھوئیں کی بجائے بخارات کی صورت میں نکوٹین کی خوراک لے سکتے ہیں۔ یہ دراصل عام سگریٹ کے مقابلے میں نکوٹین کی خوراک لینے کے لیے ایک کافی صاف ستھرا اور محفوظ طریقہ ہے. ای سگریٹ کے استعمال کو "ویپنگ" کہا جاتا ہے کیوں کہ اس میں کوئی شئے جلتی نہیں ہے.

کیا ای سگریٹ عام سگریٹ کے مقابلے میں محفوظ تر ہیں؟

صحت عامہ کی بنیادی اتھارٹیز جیسے پبلک ہیلتھ انگلینڈ، رائل کالج آف فزیشنز، نیشنل سینٹر فار اسموکنگ سیسیشن اینڈ ٹریننگ، رائل کالج آف جنرل پریکٹیشنرز اور چیریٹی ادارے بشمول کینسر ریسرچ یوکےنوش کئے جانے والے سگریٹوں کی تعداد میں کمی کرنے یا سگریٹ نوشی بالکل ترک کرنے، یا بالغ افراد کی سگریٹ نوشی کو کم اور ختم کرنے کے لیے، کے آسان طریقوں پر مبنی متبادل کے طور پر ای سگریٹس کے استعمال کو فروغ دے رہے ہیں۔

کیا ای سگریٹ کے خطرات ہیں؟

ای سگریٹ کا استعمال خطرے سے خالی نہیں ہے۔ لیکن ہم اچھی طرح یہ جانتے ہیں کہ اگر آپ عام سگریٹ نوشنی کرنا جاری رکھتے ہیں تو اس کے مقابلے میں ای سگریٹس، عام سگریٹ سے کہیں زیادہ کم نقصان دہ ہے. برطانیہ میں ای سگریٹ کو حفاظت اور معیار کے لئے سختی سے کنٹرول کیا جاتا ہے۔ جب ای سگریٹ کو مقصد کے مطابق استعمال کیا جائے تو ای سگریٹ لیکویڈ میں موجود نکوٹین نسبتا بالکل بے ضرر ہوتی ہے۔

میں ای سگریٹ کے بارے میں مزید معلومات کہاں سے حاصل کرسکتا ہوں؟

اگر آپ اپنے لئے موزوں تر ای سگریٹ اور ای لیکویڈ کو انتخاب کرنے کے لیے مدد کے خواہش مند ہیں تو ایک خصوصی vape shop (ویپ شاپ) آپ کو مدد اور مشورہ فراہم کر سکتی ہے۔ آپ یہاں پر ویپ شاپس کی فہرست تلاش کر سکتے ہیں یا شاید آپ پہلے ہی اپنے علاقے میں موجود شاپس کے بارے میں جانتے ہوں گے۔

ای سگریٹ کا استعمال اور ذخیرہ کاری

اس بات کو یقینی بنائیں کہ ای-سگریٹ کے تمام ڈیوائسز، چارجرز اور بیٹریوں پر CE کی علامات موجود ہو۔ یہ ایک تصدیقی علامت ہے جو یورپی صحت، تحفظ اور ماحولیاتی حفاظتی معیارات سے مطابقت کو ظاہر کرتی ہے۔ ای-لیکوئیڈز کو ٹھنڈی، روشنی سے دور جگہ پر بچوں اور پالتو جانوروں کی پہنچ سے دور رکھنا چاہیے اور خالی بوتلوں کو محفوظ انداز میں تلف کرنا چاہیے۔ آتشزدگی کے خطرے سے بچنے کے لیے، جیسے کہ کسی بھی برقی ڈیوائس کی صورت میں ہمیشہ ڈیوائس کا درست چارجر استعمال کرنا چاہیے اور ای-سگریٹس کو خود سے دور یا رات بھر کے لیے چارجنگ پر نہیں لگانا چاہیے۔ اس کے علاوہ، اضافی بیٹریوں کو اپنی جیب میں پڑے سکّوں یا چابیوں کے ساتھ نہ رکھیں کیونکہ اس سے آگ لگ سکتی ہے۔

مجھے سگریٹ نوشی ترک کرنے کے لیے ای-سگریٹ پر کیوں منتقل ہونا چاہیے؟

ای-سگریٹ پر منتقل ہونے کا مطلب یہ ہے کہ آپ اپنے جسم میں بے شمار نقصان دہ کیمیائی عناصر کے داخلے کو کافی حد تک کم کر رہے ہیں۔

اس سے آپ کو یہ احساس ہوسکتا ہے کہ اب آپ چیزوں کے ذائقوں کو زیادہ بہتر طور پر محسوس کرسکتے ہیں اور آپ کی سونگھنے کی حس بھی بہتر ہوگئی ہے

بہت سے لوگ ویپنگ کو سگریٹ نوشی سے زیادہ پُرلطف محسوس کرتے ہیں

آپ سگریٹس سے ای-سگریٹس پر منتقل ہونے کی صورت میں رقم بھی بچا لیں گی۔ ایک سستے برانڈ کے سگریٹس کا ایک پیکٹ نوش کرنے پر آپ کو یومیہ 8 پاؤنڈز کی لاگت آئے گی، جبکہ اتنی ہی مقدار میں ویپنگ کرتے ہوئے آپ کے یومیہ صرف 1.50 پاؤنڈز خرچ ہوں گے

آج ہی سگریٹ نوشی ترک کرنے میں اپنے کسی عزیز کی مدد کریں